اردو اہلِ زبان کی ضرورت

یونیورسٹی آف پینسلوینیا میں ایک ریسرچ سٹڈی کے لئے انہیں اردو بولنے والوں کی ضرورت ہے۔ اگر آپ امریکہ یا کینیڈا میں رہتے ہیں تو ضرور ان کی مدد کریں۔ کچھ دیر اردو میں فون پر بات کرنے پر آپ کو اجرت بھی ملے گی۔

مجھے کچھ دن پہلے کرسٹوفر گلین کی ای‌میل آئی جو یونیورسٹی آف پینسلوینیا میں Linguistic Data Consortium میں ہوتے ہیں۔ یہ کنسورشیم لسانیات پر کافی کام کر رہا ہے اور اس نے کافی ڈیٹا بھی اکٹھا کیا ہے۔ وہ آج کل ایک ریسرچ سٹڈی کر رہے ہیں جس میں انہیں مختلف زبانیں بولنے والوں کی تلاش ہے۔ ان زبانوں میں سے ایک اردو بھی ہے۔ اگر آپ امریکہ یا کینیڈا میں رہتے ہیں تو ان کی مدد ضرور کریں۔ کام کی نوعیت یہ ہے کہ آپ کو کچھ اور لوگوں کے ساتھ کچھ دفعہ فون پر مختلف موضوعات پر گفتگو کرنی ہو گی۔ ایک دفعہ کی بات 10 منٹ ہو گی اور آپ 4 سے 15 کالوں میں حصہ لے سکتے ہیں۔ اس کام کے آپ کو تین سو ڈالر تک مل سکتے ہیں۔ تفصیلات ان کے ویب سائٹ پر۔

I recently received an email from Christopher Glenn of the Linguistic Data Consortium at the University of Pennsylvania. His email (with the URLs changed to hyperlinks) is copied below:

We currently have a study, which seeks native speakers of 20+ languages, including Urdu. This is a paid research study in which Urdu speaking participants can earn up to $300 by simply having conversations on the telephone. Those conversations operate in much the same way as a forum or online chat: participants dial in toll free, and are then given a topic of the day to discuss with a call partner -typically someone that the caller doesn’t know. Topics range anywhere from politics to entertainment.

Because it is a telephone study, we can only recruit speakers living in the United States or Canada. Unfortunately, we are finding recruitment for Urdu speakers to be a difficult process. If your organization has any sort of mailing list or public forum, I am hoping that you can help us in our recruitment efforts by passing along our information to your members and affiliates. Our website

If you would like to know more, please email, call us at 1-800-380-7366, or simply look us up at the LDC site and UPenn Site.

If you are a native Urdu speaker, please do help.

Author: Zack

Dad, gadget guy, bookworm, political animal, global nomad, cyclist, hiker, tennis player, photographer

One thought on “اردو اہلِ زبان کی ضرورت”

  1. یہ کام میں اسلام آباد سے بھی کر لیتا اگر وقت کا فرق اتنا زیادھ نہ ہوتا ۔ رات کو جاگنا میرے لئے مشکل ہے

Comments are closed.