پاکستانی پاسپورٹ میں مذہب واپس

اکتوبر میں جب پاکستانی پاسپورٹ بین الاقوامی معیار پر تبدیل کیا گیا تو اس میں سے مذہب کا خانہ نکال دیا گیا۔ اس پر پاکستان کی مذہبی جماعتوں کو تکلیف ہوئی۔ انہوں نے اس قدم کے خلاف انتہائی نامعقول دلائل دیئے اور احتجاج کیا۔ اب کچھ دن پہلے حکومت نے سر جھکا دیا اور مذہب کا خانہ پاسپورٹ میں واپس ڈال دیا۔

جیسا کہ میں نے پہلے لکھا تھا اکتوبر میں جب پاکستانی پاسپورٹ بین الاقوامی معیار پر تبدیل کیا گیا تو اس میں سے مذہب کا خانہ نکال دیا گیا۔ اس پر پاکستان کی مذہبی جماعتوں کو تکلیف ہوئی۔ انہوں نے اس قدم کے خلاف انتہائی نامعقول دلائل دیئے اور احتجاج کیا۔ اب کچھ دن پہلے حکومت نے سر جھکا دیا اور مذہب کا خانہ پاسپورٹ میں واپس ڈال دیا۔

پاکستان کی حکومت نے نئے کمپیوٹرائزڈ اور مشین سے پڑھے جانے والے پاسپورٹ میں مذہب کا خانہ شامل کرنے کا اعلان کیا ہے۔

[…] اس مسئلے پر دینی جماعتیں گزشتہ ایک برس سے شدید احتجاج کر رہی تھیں اور ان کی حالیہ حکومت مخالف مہم میں پاسپورٹ کے خانے کے مسئلے کو مرکزیت حاصل تھی۔ دینی جماعتیں نئے پاسپورٹ میں مذہب کے خانے کے نہ ہونے کو امریکی دباؤ کا نتیجہ قرار دیتی آئی ہیں۔

تاہم وزیر اطلاعات کا کہنا تھا کہ سابق وزیر اعظم ظفراللہ جمالی کے دورِ حکومت میں نئے پاسپورٹ جاری کرنے کا فیصلہ کیا گیا تھا اور اسی دوران مذہب کا خانہ ’نظرانداز‘ ہو گیا تھا۔

[…] انھوں نے یہ ماننے سے انکار کیا کہ یہ فیصلہ دینی جماعتوں کے دباؤ پر کیا گیا ہے۔ وفاقی وزیر کے مطابق یہ ایک عوامی مطالبہ تھا جو پورا کر دیا گیا۔

کیا حکومت پاکستان کوئی فیصلہ سوچ سمجھ کر نہیں کر سکتی؟ اور اگر اب پوری کابینہ مذہب کا خانہ واپس لانے پر متفق تھی تو اسے نکالنے کا فیصلہ کس نے کیا تھا؟

آخر پاسپورٹ میں مذہب کے خانے کا مقصد کیا ہے؟ مجھے تو کوئی فائدہ نظر نہیں آتا۔ ہے کوئی مائی کا لعل جو اس خانے کے حق میں دلائل دے سکے؟ اور ہاں میں مذہب کے خانے کے فوائد کے لئے ہمہ تن گوش ہوں، نہ کہ یہ سننے کے لئے کہ یہ امریکہ یا احمدیوں کی اسلام یا پاکستان کے خلاف سازش تھی۔

Author: Zack

Dad, gadget guy, bookworm, political animal, global nomad, cyclist, hiker, tennis player, photographer

18 thoughts on “پاکستانی پاسپورٹ میں مذہب واپس”

  1. In my opinion, Presence or absence of religion column in passport does not make any good or bad for Islam. Stopping non-Muslims from entering Makkah is duty of Saudi government. However, it was taken as political point Mutihida Majlis-i-Amal (MMA) and they won over the ruling junta.

    Today (April 02) is planned a wheel-jam and shutters-down again by MMA against price hike of edibles and daily use items saying that it is mainly caused by petroleum products the prices of which increase every fort-night. Two days back the Oil & gas advisory committee proposed another Rupees 2 increase in the motor spirit price which is already selling at Rs 45.60 per liter. In an effort to stop general public joining the strike, first time in their tenure the present ruling junta didn’t allow the increase which was to take effect on April 01. It may be interesting to know that on October 12, 1999, when Pervez Musharraf took over, it was Rupees 23 per liter.

  2. It is good that they postponed the new oil prices due to MMA protests but adding the religion column back is just crazyness. They have thousands of passports ready with no religion column, government has announced that they will stamp the new column on all these passports. I don’t think that stamped religion column would be machine readable so it is useless to stamp them anyway.

  3. اسلام و علیکم
    ذکریا بھائی جو وجوہات کا لنک آپ نے اوپر دیا ہے نا معقول وجوہات کے نام سے وہ وجوہات واقعی اگر کسی نے دی ہیں تو نا معقول ہی نہیں بلکےکسی بغیر عقل والے انسان کی وجوہات ہی ایسی ہو سکتی ہیں اور مجھے ان پر یقین اس لیے نہیں ہے کہ آج کل ایک فیشن چل نکلا ہے مولویوں کے خلاف بولنا اور ان کو کم عقل ثابت کرنے کی کوششیں کرنا ۔ یہ بات بالکل درست ہے کہ پاسپورٹ ملک کی شناخت ہوتی ہے اور اس میں مذہب کا کیا تعلق ؟ اور آپ یہ بھی کہتے ہیں کہ احمدیوں کے حوالے سے بات نا کی جائے آپ سے ۔ مگر ایک اسی وجہ سے تو پاسپورٹ میں یہ شامل کیا گیا ہے تو اس پر بات کیسے نہیں ہو گی۔ اس بات پر تو تمام فریق متفق ہیں کہ جو رسول اللہ کو نبی آخر الزماں نہیں مانتا وہ مسلمان نہیں ہے۔ اور اس کے متعلق سورہ توبہ کی آیت نمبر ٢٨ میں یوں کہا گیا ہے

    O Believers, the idolaters are simply unclean, so let them not come near the Sacred Mosque after this year of theirs. And if you fear poverty, God will soon enrich you of His bounty if He will; God is Knowing, Wise.(28)

    تو ایک تو غیر مسلم ہیں جن کے نام جوزف ہو گیا یا کوئی اور نام ان کی شناخت تو مسلہ نہیں ہے اور ان کو حرم جانے سے روکا جا سکتا ہے۔ مگر جس کا نام احمد ہو مگر رسول اللہ کو آخری نبی نا مانتا ہو اور جن کے بارے میں اجتہاد ہو چکا ہو کہ وہ دائرہ اسلام سے تعلق نہیں رکھتے تو انکو میرے خیال میں اسی طرح علیحدہ پہچان دی جا سکتی ہے۔ ویسے بھی کیا خیال ہے اگر میں عیسائی ہوں اور کسی جگہ مجھ سے پوچھا جائے کہ میرا مذہب کونسا ہے تو میرے خیال میں بتانے میں نا کوئی خرج ہے نا کوئی شرم تو مسلہ میرے خیال میں مولویوں کا اتنا نہیں ہے جتنا دوسروں کا ہے۔

  4. Dad: While I agree that prices of oil products in Pakistan have been a way of generating revenue by increasing prices with the international market but not decreasing them (or at least not proportionally) when the international prices go down, the current increase is probably due to the international market price which is pretty high right now and expected to go up further as far as the eye can see.

    I suspect most of the difference between the 1999 oil price and now is due to the rise in international prices.

    Danial: Yeah, that is crazy. But I heard that getting religion stamped in those passports is going to be optional.

    و علیکم السلام جہانزیب: پہلی بات تو یہ کہ میرا نام زکریا ہے نہ کہ ذکریا۔

    نامعقول وجوہات کا لنک تھوڑا طنزیہ ہے مگر حقیقت سے زیادہ دور نہیں۔ اگر آپ چاہیں تو گوگل کے ذریعہ متحدہ مجلس عمل کے بیانات پڑھ سکتے ہیں۔

    آپ بات پھر احمدیوں تک لے آئے ہیں۔ کون مسلمان ہے اور کون نہیں اس کا فیصلہ میں نہیں کر سکتا اور نہ ہی اس بحث میں پڑنا چاہتا ہوں۔ سوال آیا غیرمسلموں کا مسجد الحرام میں داخلہ تو اس بارے میں میں آپ کی توجہ اسی آیت کی طرف دلاوں گا۔ وہاں لفظ مشرک استعمال ہوا ہے نہ کہ کافر یا غیرمسلم۔

    دوسری بات یہ ہے کہ مکہ کون جا سکتا ہے اور کون نہیں اس کا فیصلہ پاکستان نہیں بلکہ سعودی حکومت کرتی ہے۔ آخر ہمیں کیا تکلیف ہے جب باقی مسلمان ممالک کے ماسپورٹوں میں مذہب کا خانہ نہیں ہے اور اس کے باوجود سعودی حکومت کو دیزہ دینے میں دقت نہیں ہوتی۔

    نام کی بات بھی عجیب کی آپ نے۔ لوگوں کے نام ان کی زبان، علاقے اور مذہب کی نشاندہی کرتے ہیں۔ اس لئے نام سے مذہب کا اندازہ غلط ہو سکتا ہے۔ میں ایک ایرانی یہودی کو جانتا ہوں جس کا نام عبداللہ تھا۔ اسی طرح پاکستان میں بہت سے عیسائیوں کے نام مسلمانوں سے مختلف نہیں ہوتے۔ یہاں امریکہ میں لوگ ہیں جو اسلام قبول کر چکے ہیں مگر ان کے نام امریکی ہیں نہ کہ عربی۔

  5. I agree with you Zack. The religion section is pointless even for the reasons that the mullahs raise because all one has to do to change their stated religion in their passport is to send a letter to the authorities officially declaring that you have converted (I think you probably also have to have this published in a newspaper or something). That means that if an Ahmadi, or anyone, wanted to pose as a “Muslim” (according to the state’s definition) it wouldn’t be very difficult.

    The essential point is that no one but our Creator knows what we really believe, so the state has no business trying to pigeonhole us all. I’m sure there are many Pakistanis people who have “Muslim” written in their passport but are actually atheists, or something else. Many of us think we worship God, but we are uknowingly worshippers of wealth, fame, sex… whatever… what gives the state the right to draw the line?

  6. جو بولی (جسے اب بہت لوگ زبان کہتے ہیں) انسان اپنے انتہائ بچپن میں سیکھتا ہے اسی میں وہ صحیح اظہار خیال کر سکتا ہے۔ چنانچہ میں نے اردو میں لکھنے کا قصد کیا ہے۔

    ہم نے ابتدائ مدرسہ میں پڑھا تھا اونٹ رے اونٹ تیری کونسی کل سیدھی۔ تو ہماری حکومت کی کچھ ایسی ہی حالت ہے۔ دوسرے جو کوئ سمجھے کہ وہ بہت جانتا ہے تو بس اس کے دماغ کا سیکھنے والا حصہ بند ہو جاتا ہے اور پھر وہ کچھ نہیں سیکھ سکتا۔ ہر مطلق العنان حاکم یہی کہتا ہے کہ وہ سب کچھ جانتا ہے اور ملک اس کے بغیر نہیں چل سکتا۔ باقی آپ سب خود سمجھدار ہیں

  7. (1) There are two departments in our country, Ministry of Information and Inter-services Public Relations (ISPR), which are meant to issue statements to misguide public.

    (2) Price of petrolem products is not kept proportional to the price crude in world market. It only increases except for one tenure of Nawaz Sharif when it reduced. Even the increase always much more than the increase in the price of crude.

    (3) Religion column does not make any difference but why was it removed if it was to be re-inserted in a lousy manner? My son (younger brother of Zakaria) had applied for passport which was to be issued after 12 days. Yesterday, he brought it with “Religion: Islam” obliquely stamped on one page on the Passport #, only to make it look ugly.

    (4) As announced by the authorities, religion column will be inserted on the first page but that will not be machine-readable.

    (5) جہاں تک مرزاي یا احمدیوں کا تعلق ہے جب ذوالفقار علی بٹھو کی حکومت نے انہیں غیرمسلم قرار دیا تو ان کے خلیفہ نے حکم جاری کیا تھا کہ وہ اپنے آپ کو مسلم لکھیں۔ چنانچہ آج یہ صورت حال ہے کہ یقین سے نہیں کہا جا سکتا کہ کون مرزائ یا احمديہ ہے

    (6) ہر وہ شخص مشرک ہے جو اللہ کی صفات میں سے کوئ کسی اور سے منسوب کرے اور جو ایسا کرے وہ ظالم (کافر) ہے

  8. معافی چاہتا ہوں اوپر کومنٹ میں “بھٹو” کی بجاۓ “بٹھو” لکھ دیا

  9. Well i dont know much about this issue and i am not interested in it anyway. For me my religion is what i practice in my life and what i believe in and no document can be a testiment to wehat i believe in. MMA is ridiculous in asking for the change. But then again i raise an eye of suspicion when one thinks why did the govt. change the format of the passport in the first place. Why create this issue for no good reason. Why exclude the religion column from the passport when making it computerized. It takes two to make a quarrel and i have no dobt in my mind that there was a motive behind creating this issue. Everyone knows that the lot in Pakistan will object to the change then why on earth make it an issue?

  10. Well according to koran Allah have chosen the name of believers Muslim and their Deen is Islam, now if any one who believes and practices on koranic laws and teacing is muslim, as per koran, I don’t understand why ahmedis insist to be muslims when they have their own Nabi and relegion of ahmediyyat.

  11. Aslam-o-alikum ,
    bhi ap ney kaha kh (bhoto) ney ya us wakt ki govt ney Ahmadiyon ko non muslam kya
    theek ap mujey yea batao kh Hazrat imam hussian ko kis ney shahid kya or us wakt key molviyyon ney hi ap(Hazrat imam hussian) key khlaf fatwa dya tha .khuch samaj i kh nahin
    barey Gore ki baat hai samajna
    Ajmal bhi samaj dar key lye ishara hi kafi hota hai
    ap say ik guzarish hai kh wo Natinal assambli ki 22 din ki karwi hi manzar-e-aam per ley ao jan ham ko kafir krar dya .
    pher dekhtey hain kh kon sacha hai
    or ik baat or jitna ham (Hazrat MUHAMAD s.w) ko akhri nabi mantey hain utna koi nahin manta
    khuda ap sab per rehmat karey
    ( ameen)
    khuda hafiz

  12. Religion is something personal between an individual and our creator. Thus writing in documents such as pasports should not be compulsry. As it will only lead to further discrimination for groups such as Ahmadis who are considered to be non-Muslims by govenment.

    In regards to Ahmadis having their own Nabi. Only Nabi they believe in is Holy Prpophet (P.B.U.H).

  13. Chanad: Agreed.

    Dad: Agreed about the Pakistan government.

    Moiz: It does seem like the people who made the decision to remove the column didn’t think it through. However, I don’t think they had sinister motives.

    And I believe that putting a religion column in the passport is a minority rights issue, even if it is not as important as other abuses of minority rights in Pakistan.

    Everyone: Please do not bring up the issue of whether Ahmadis are Muslims or not. It is a question I can’t do justice to in a comment and would require a post of its own. Plus the discussion here would turn into a flame war here and become useless. Focus on the topic at hand which is the religion column in passports.

  14. پاسپورٹ میں مذہب کا خانہ ڈالنا کسی ایسی قیادت کا حق نہیں ہوسکتا جو سیاسی ہو۔ خاص کر پاکستانی سیاستدانوں میں اتنی صلاحیت ہی نہیں ہے کہ وہ کسی کے مذہب کے بارے میں فیصلہ کرسکیں کیونکہ (۱)وہ انسان ہیں اور اسلام کسی انسان کو یہ حق نہیں دیتا کہ وہ کسی کلمہ گو کو غیر مسلم کہے۔ اور اگر (۲)وہ خود کو انسان نہیں سمجهتے تو بهی وہ انکی مذہبی لیاقت اتنی نہیں ہے کہ وہ کسی کے السلام کا فیصلہ کر سکیں۔ اسلام کا فیصلہ کرنے کا اختیار تو قرآن کریم رسول خدا صلعم کو بهی نہیں دیتا۔ اللہ تعالیٰ فرماتا ہے کہ کہ ایسے اعرابی رسول کریم کے پاس آتے ہیں جو کہتے ہیں کہ ہم ایمان لائے۔ اے رسول تو انہیں کہ دو کہ یہ تو نہ کہو کہ تم ایمان لائے ہو۔ ہاں یہ کہنے سے تمہیں کوئی نہیں روک سکتا کہ تم اسلام لائے ہو۔ ایمان تو ابهی تمہارے دلوں میں داخل نہٰن ہوا۔ اب دیکهئے جس آیت کا یہ ترجمہ خاکسار نے درج کیا ہے اس میں واضح طور پر لکها ہے کہ باوجود اسکے کہ اللہ تعالیٰ نے رسول کریم کو بتا دیا کہ ان بدو لوگوں کے دلوں میں ایمان نے جهانک کر بهی نہیں دیکها پهر بهی اے رسول آپ کو یہ حق نہیں ہے کہ انہیں غیر مسلم کہ سکیں۔ اسی قرآنی آیت کی روشنی میں آنحضور صلعم فرماتے ہیں کہ کسی کلمہ گو کو کافر کہنے ولا خود کافر ہوتا ہے۔ اور ق فرآن میں اللہ تعالیٰ فرماتا ہے کہجو تمہیں السلام علیکم کہے اسے یہ نہیں کہ سکتے کے تو مومن نہیں ہے۔ پس جب اللہ تعالیٰ رسول کریم کو یہ حق نہیں دیتا کہ کسی کے اسلام کا فیصلہ کریں بلکہ یہ حق صرف اپنے پاس رکهتا ہے تو پهر جو بهی یہ حق حاصل کرنے کی کوشش کرتا ہے تو وہ گویا رسول کریم صلعم سے مرتبے میں بڑا ہونے یا پهر خدا ہونے کا دعویٰ کرتا ہے۔ کیونکہ کسی کے اسلام کا فیصلہ صرف خدا ہی کرسکتا ہے نہ خدا کا رسول صلعم۔ اور جب رسول بهی یہ فیصلہ نہیں کرسکتا تو کون سی حکومت ہے جو یہ حق رکهتی ہے کہ رسول کریم سے زیادہ اسلام کے بارہ میں فیصلہ کرنے کا حق رکهے۔
    یہ تو ہوگیا مذہبی نکتہ نگاہ سے اس بات کا مختصر تجزیہ کہ کسی حکومت کو یہ حق ہے کہ نہیں کہ وہ اسلام کا فیصلہ کرے۔ باقی رہا سیاسی نکتہ نظر سے اس بات پر تبصرہ تو یہ تو کوئی سیاسی مبصر ہی بہتر طور پر کرسکتا ہے۔ خاکسار تو بس یہی کہے گا کہ سیاسی حکومتوں کو یہ بات زیب نہیں دیتی کہ حکومتی معاملات مین مذہب کو بهی رگیدیں۔ مذہب ایک شہری کا ذاتی معاملہ ہے اور کسی حکومت کو اس میں دخل دینے کا قانونی طور پر کوئی حق نہیں ہے۔ اس سے پاکستان کی ساکه کو نقصان پہنچے گا اور مزہبی تفرقہ بازی کو ہوا ملے گی۔ جہاں تک احمدیوں کا تعلق ہے تو احمدیوں کو اس سے نقصان تو کوئی ایسا خاص نہیں پہنچے گا ہاں فائدہ یہ پہچے گا کہ جو حکومت کی طرف سے بار بار اعلان ہوتا ہے کہ احمدیوں کی تعداد چند ہزار ہے اس کے جهوٹے ہونے کا علم ہوگا۔ نیز بیرونی ممالک میں جو احمدی غیر اسلام اور پرتشدد رویے سے متاثر ہوکر جاتے ہیں انکو سیاسی پناہ ملنے میں آسانی ہوگی کیونکہ حکومتی مہر ہوگی کہ ہاں واقعی یہ شخص احمدی ہے۔ جہان تک حج کرنے کا سوال ہے تو سعودی حکومت کو اس سے کوئی سروکار نہیں کہ کہ کون آتا ہے۔ وہ صرف مشرکوں کے داخلے پر نظر رکهنے کی مجاز ہے اور اپنا دائرہ کار سمجهتے ہوئے وہ احمدیوں پر حج کی پابندی نہیں لگاتی۔
    واسلام
    احسان دانش
    danishipk@rediffmail.com

  15. احسان: بالکل صحیح کہا آپ نے۔ مذہب ہر انسان کا ذاتی معاملہ ہے۔

    br3ntt: Even if Ahmedis are to be barred from Makkah and Madina (a policy I disagree with), that does not imply that Pakistani passports should include a religion column.

  16. br3ntt: Article 260 defines who is a Muslim and excludes Ahmedis from that definition. Doing that in the constitution is a very bad idea in my opinion, but that is a separate discussion and I might address it later in a separate post. That article, however, does not require a religion column in the Pakistani passport.

Comments are closed.